islam

مفہوم کی اقسام

اس کی دو قسمیں ہیں ۔ ۱۔ جزئی         ۲۔ کلی ۱۔جزئی:     ''ھُوَ مَفْہُوْمٌ اِمْتَنَعَ فَرْضُ صِدْقِہٖ عَلیٰ کَثِیْرِیْنَ'' وہ مفہوم جس کا صدق کثیرافراد پر تجویز کرناعقلا ممتنع ہو جیسے: زید کہ اس کا صدق… Read More

اشیاء کی حقیقتیں

اس سبق میں چند اشیاء کی حقیقتیں بیان کی جائیں گی۔ ۱۔جوہر: ''ھُوَ جِسْمٌ قَائِمٌ بِذَاتِہٖ '' وہ جسم جس کا قیام کسی چیز کے پائے جانے پر موقوف نہ ہو ۔یعنی اپنے قائم ہونے میں غیر کا محتاج نہ… Read More

چند ضروری تعریفات

    اس سبق میں چند ایسی تعریفات بیان کی جائیں گی کہ جن کا استعمال علم منطق میں بہت زیادہ ہے۔ ۱۔حقیقت وماہیت:     کسی شی کے وہ اجزا جن سے مل کر کوئی چیز بنے اور اگر… Read More

مرکب کی اقسام

لفظِ مرکب کی دوقسمیں ہیں ۔ ۱۔ مرکب تام         ۲۔ مرکب ناقص ۱۔ مرکب تام:     مَایَصِحُّ السُّکُوْتُ عَلَیْہِ۔ جس پر سکوت درست ہو۔  یعنی متکلم نے جب کوئی کلام کیا تو سننے والے کو اسی… Read More

متکثرالمعنی کی اقسام

اس کی چار قسمیں ہیں ۔ ۱۔مشترک     ۲۔منقول    ۳۔ حقیقت     ۴۔ مجاز ۱۔مشترک:     وہ لفظ مفردجس کے کثیر معانی ہوں اورواضع نے اس لفظ کوہرہرمعنی کیلئے ابتداء علیحدہ علیحدہ وضع کیا ہوجیسے: ہار ،پھل۔ہارکے دومعنی… Read More

معنی کی وحدت وکثرت کے اعتبار سے لفظ مفرد کی اقسام

اس اعتبا ر سے لفظ مفرد کی دو قسمیں ہیں ۔ ۱۔ متحد المعنی         ۲۔ متکثر المعنی ۱۔ متحد المعنی:     وہ لفظ مفرد جس کا ایک ہی معنی ہو جیسے: زَیْدٌ۔ ۲۔ متکثر المعنی:  … Read More

معنی کے مستقل ہونے یا نہ ہونے کے اعتبار سے لفظ مفرد کی اقسام

اس اعتبار سے لفظ مفرد کی تین قسمیں ہیں ۔ ۱۔ اسم     ۲۔ کلمہ     ۳۔ اداۃ ۱۔ اسم:     وہ لفظ مفرد ہے جواپنا معنی خود بتائے اور اس کا صیغہ یعنی ساخت اور ہیئت کسی زمانے… Read More

مفرد کی تقسیمات

مفرد کی تین طرح سے تقسیم کی جاتی ہے۔     ۱۔ لفظ ومعنی کے اجزاء ہونے یانہ ہونے کے اعتبار سے۔     ۲۔ معنی کے مستقل ہونے یا نہ ہونے کے اعتبار سے۔     ۳۔ معنی کی… Read More

لفظ کی اقسام

    لفظ دال یعنی وہ لفظ جس کو کسی معنی پر دلالت کرنے کیلئے وضع کیا جاتاہے،اس لفظ کی دو قسمیں ہیں : ۱۔ مفرد         ۲۔مرکب ۱۔مفرد:     ''مَا لاَ یُقْصَدُ بِجُزْئِہِ الدَّلاَلۃُ عَلیٰ جُزْءِ… Read More

دلالت لفظیہ وضعیہ کی اقسام

  یاد رہے کہ فن منطق میں پچھلے سبق میں ذکر کی گئی چھ دلالتوں میں سے صرف دلالت لفظیہ وضعیہ ہی کا اعتبار ہے اور اسی سے بحث کی جاتی ہے کیونکہ استاذ کے سمجھانے اور طالب علم کے… Read More