Our website is made possible by displaying online advertisements to our visitors. Please consider supporting us by whitelisting our website.

جنت کے پھاٹک

    حدیث شریف میں ہے کہ جنت کے پھاٹک اتنے بڑے بڑے ہیں کہ اس کے دونوں بازوؤں کے درمیان چالیس برس کا راستہ ہے مگر جب جنتی جنت میں داخل ہونے لگیں گے تو ان پھاٹکوں پر ہجوم کی کثرت سے تنگی محسوس ہونے لگے گی۔(1)
                     (مشکوٰۃ،ج۲،ص۴۹۷)
1۔۔۔۔۔۔مشکاۃ المصابیح،کتاب احوال القیامۃ…الخ،باب صفۃالجنۃ واہلہا، الحدیث:۵۶۲۹، ج۲،ص۳۳۲

error: Content is protected !!