Our website is made possible by displaying online advertisements to our visitors. Please consider supporting us by whitelisting our website.

Month: 2019 اگست

ذَوقِ نَعت ۱۳۲۶ھ برادرِ اعلیٰ حضرت شہنشاہِ سخن مولانا حسن رضا خان

جائے گی ہنستی ہوئی خلد میں اُمت ان کی

جائے گی ہنستی ہوئی خلد میں اُمت ان کی کب گوارا ہوئی اللّٰہ کو رِقت ان کی ابھی پھٹتے ہیں…

Read More »
ذَوقِ نَعت ۱۳۲۶ھ برادرِ اعلیٰ حضرت شہنشاہِ سخن مولانا حسن رضا خان

مبارک ہو وہ شہ پردے سے باہر آنے والا ہے

مبارک ہو وہ شہ پردے سے باہر آنے والا ہے گدائی کو زمانہ جس کے دَر پر آنے والا ہے…

Read More »
ذَوقِ نَعت ۱۳۲۶ھ برادرِ اعلیٰ حضرت شہنشاہِ سخن مولانا حسن رضا خان

نہ ہو آرام جس بیمار کو سارے زمانے سے

نہ ہو آرام جس بیمار کو سارے زمانے سے اُٹھا لے جائے تھوڑی خاک اُن کے آستانے سے تمہارے دَر…

Read More »
ذَوقِ نَعت ۱۳۲۶ھ برادرِ اعلیٰ حضرت شہنشاہِ سخن مولانا حسن رضا خان

عجب رنگ پر ہے بہارِ مدینہ

عجب رنگ پر ہے بہارِ مدینہ کہ سب جنتیں ہیں نثارِ مدینہ مبارک رہے عندلیبو تمہیں گل ہمیں گل سے…

Read More »
ذَوقِ نَعت ۱۳۲۶ھ برادرِ اعلیٰ حضرت شہنشاہِ سخن مولانا حسن رضا خان

دل درد سے بسمل کی طرح لوٹ رہا ہو

دل درد سے بسمل کی طرح لوٹ رہا ہو سینہ پہ تسلی کو ترا ہاتھ دَھرا ہو کیوں اپنی گلی…

Read More »
ذَوقِ نَعت ۱۳۲۶ھ برادرِ اعلیٰ حضرت شہنشاہِ سخن مولانا حسن رضا خان

تم ذاتِ خدا سے نہ جدا ہو نہ خدا ہو

تم ذاتِ خدا سے نہ جدا ہو نہ خدا ہو اللّٰہ کو معلوم ہے کیا جانیے کیا ہو یہ کیوں…

Read More »
ذَوقِ نَعت ۱۳۲۶ھ برادرِ اعلیٰ حضرت شہنشاہِ سخن مولانا حسن رضا خان

اے راحت جاں جو تِرے قدموں سے لگا ہو

اے راحت جاں جو تِرے قدموں سے لگا ہو کیوں خاک بسر صورتِ نقش کف پا ہو ایسا نہ کوئی…

Read More »
ذَوقِ نَعت ۱۳۲۶ھ برادرِ اعلیٰ حضرت شہنشاہِ سخن مولانا حسن رضا خان

دل میں ہو یاد تری گوشۂ تنہائی ہو

دل میں ہو یاد تری گوشۂ تنہائی ہو پھر تو خلوت میں عجب اَنجمن آرائی ہو آستانہ پہ تِرے سر…

Read More »
ذَوقِ نَعت ۱۳۲۶ھ برادرِ اعلیٰ حضرت شہنشاہِ سخن مولانا حسن رضا خان

سن لو میری اِلتجا اچھے میاں

سن لو میری اِلتجا اچھے میاں میں تصدق میں فدا اچھے میاں اب کمی کیا ہے خدا دے بندہ لے…

Read More »
ذَوقِ نَعت ۱۳۲۶ھ برادرِ اعلیٰ حضرت شہنشاہِ سخن مولانا حسن رضا خان

عجب کرم شہِ والا تبار کرتے ہیں

عجب کرم شہِ والا تبار کرتے ہیں کہ نااُمیدوں کو اُمیدوار کرتے ہیں جما کے دِل میں صفیں حسرت و…

Read More »
Back to top button
error: Content is protected !!