کبیرہ گناہوں کی تعداد اور ان کے متعلقات

    حضرت سیدنا ابو طالب مکی رحمۃاللہ تعالیٰ علیہ فرماتے ہیں:”کبیرہ گناہ سترہ ہیں۔
Advertisement
چار کا تعلق دل سے ہے: (۱)شرک (۲)گناہ پر اصرار (۳)مایوسی اور (۴)اللہ عزوجل کی خفیہ تدبیر سے بے خوف رہنا، 
چار کا تعلق زبان سے ہے: (۱)تہمت لگانا (۲)جھوٹی گواہی دینااور (۳)جادو کرنا اور جادو ہر اس کلام کو کہتے ہیں جو انسان یا اس کے بدن کے کسی حصہ( کی حالت) کو بدل دے (۴)جھوٹی قسم اٹھانا اور اس سے مراد وہ قسم ہے جس کے ذریعے کسی کا حق باطل کیا جائے یا کسی باطل کو ثابت کیاجائے، 
تین کا تعلق پیٹ سے ہے: (۱)یتیم کا مال ظلماً کھانا (۲)سود کھانا(۳)ہر نشہ آور چیز پینا،
دوکا تعلق شرمگاہ سے ہے: (۱)زنااور (۲)لواطت،
دو کا تعلق ہاتھوں سے ہے: (۱)قتل کرنااور (۲)چوری کرنا،
ایک کا تعلق پاؤں سے ہے:وہ جہاد سے فرار ہونا ہے ،
ایک گناہِ کبیرہ کا تعلق پورے جسم سے ہے: وہ والدین کی نافرمانی کرنا ہے ۔    حضرت سیدنا ابو طالب مکی رحمۃاللہ تعالیٰ علیہ فرماتے ہیں:”کبیرہ گناہ سترہ ہیں۔
چار کا تعلق دل سے ہے: (۱)شرک (۲)گناہ پر اصرار (۳)مایوسی اور (۴)اللہ عزوجل کی خفیہ تدبیر سے بے خوف رہنا، 
چار کا تعلق زبان سے ہے: (۱)تہمت لگانا (۲)جھوٹی گواہی دینااور (۳)جادو کرنا اور جادو ہر اس کلام کو کہتے ہیں جو انسان یا اس کے بدن کے کسی حصہ( کی حالت) کو بدل دے (۴)جھوٹی قسم اٹھانا اور اس سے مراد وہ قسم ہے جس کے ذریعے کسی کا حق باطل کیا جائے یا کسی باطل کو ثابت کیاجائے، 
تین کا تعلق پیٹ سے ہے: (۱)یتیم کا مال ظلماً کھانا (۲)سود کھانا(۳)ہر نشہ آور چیز پینا،
دوکا تعلق شرمگاہ سے ہے: (۱)زنااور (۲)لواطت،


(adsbygoogle = window.adsbygoogle || []).push({});

دو کا تعلق ہاتھوں سے ہے: (۱)قتل کرنااور (۲)چوری کرنا،
ایک کا تعلق پاؤں سے ہے:وہ جہاد سے فرار ہونا ہے ،
ایک گناہِ کبیرہ کا تعلق پورے جسم سے ہے: وہ والدین کی نافرمانی کرنا ہے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

error: Content is protected !!