Our website is made possible by displaying online advertisements to our visitors. Please consider supporting us by whitelisting our website.

ایمان ہے قالِ مصطفائی

ایمان ہے قالِ مُصطَفائی
قرآن ہے حالِ مصطفائی
اللّٰہ کی سلطنت کا دولہا
نقشِ تِمْثالِ مصطفائی
کُل سے بالا رُسل سے اَعلیٰ
اِجْلال و جلالِ مصطفائی
اَصحاب نُجومِ رہنما ہیں
کشتی ہے آلِ مصطفائی
اِدبار سے تو مجھے بچالے
پیارے اِقبالِ مصطفائی
مُرْسَل مُشتاقِ حق ہیں     اور حق
مشتاق وصالِ مصطفائی
خواہانِ وصالِ کِبریا ہیں
جُویانِ جمالِ مصطفائی
محبوب و محب کی مِلک ہے ایک
کَونَین ہیں     مالِ مصطفائی
اللّٰہ نہ چھوٹے دستِ دل سے
دامانِ خیالِ مصطفائی
ہیں     تیرے سپرد سب امیدیں
اے جُود و نَوالِ مصطفائی
روشن کر قبر بیکسوں     کی
   اے شمعِ جمالِ مصطفائی
اندھیر ہے بے تِرے مِرا گھر
   اے شمعِ جمالِ مصطفائی
مجھ کو شبِ غم ڈرا رہی ہے   
 اے شمعِ جمالِ مصطفائی
آنکھوں    میں چمک کے دل میں    آجا
   اے شمعِ جمالِ مصطفائی
میری شبِ تار دن بنا دے
   اے شمعِ جمالِ مصطفائی
چمکا دے نصیبِ بد نصیباں
اے شمعِ جمالِ مصطفائی
قَزّاق ہیں     سر پہ راہ گم ہے
اے شمعِ جمالِ مصطفائی
چھایا آنکھوں     تلے اندھیرا
اے شمعِ جمالِ مصطفائی
دل سرد ہے اپنی لو لگا دے
اے شمعِ جمالِ مصطفائی
گھنگھورگھٹائیں    غم کی چھائیں
اے شمعِ جمالِ مصطفائی
بھٹکا ہوں     تو راستہ بتا جا
اے شمعِ جمالِ مصطفائی
فریاد دباتی ہے سیاہی
اے شمعِ جمالِ مصطفائی
میرے دلِ مردہ کو جلا دے
اے شمعِ جمالِ مصطفائی
آنکھیں     تری راہ تک رہی ہیں
اے شمعِ جمالِ مصطفائی
   دکھ میں    ہیں اندھیری رات والے
   اے شمعِ جمالِ مصطفائی
   تاریک ہے رات غم زدوں     کی  
  اے شمعِ جمالِ مصطفائی
   ہو دونوں     جہاں     میں     منھ اُجالا
   اے شمعِ جمالِ مصطفائی
    تاریکیِ گُور سے بچانا
   اے شمعِ جمالِ مصطفائی
    پُر نور ہے تجھ سے بزمِ عالَم
   اے شمعِ جمالِ مصطفائی
   ہم تِیرہ دلوں     پہ بھی کرم کر
   اے شمعِ جمالِ مصطفائی
          لِلّٰہ ادھر بھی کوئی پھیرا
   اے شمعِ جمالِ مصطفائی
تقدیر چمک اٹھے رضاؔ کی
اے شمعِ جمالِ مصطفائی
٭…٭…٭…٭…٭…٭
error: Content is protected !!