Our website is made possible by displaying online advertisements to our visitors. Please consider supporting us by whitelisting our website.

عوام الناس کو ان کی سمجھ سے بالاتر باتیں بتانا:

   عوام الناس اور علوم میں مہارت نہ رکھنے والوں کواللہ عزوجل کی ذات وصفات اور ایسے اُمورمیں تفکر کرنے پر ابھارنا جن تک ان کی عقلوں کی رسائی نہ ہو، ان کو گمراہ کرنے کے مترادف ہے کیونکہ اس طرح وہ دین کے بنیادی اصولوں میں شک کرنے لگیں گے اور بعض اوقات اللہ عزوجل کے بارے میں ایسی باتیں خیال کرنے لگیں گے جن سے وہ کافریابدعتی ہو جائیں گے اور اپنی حماقت کے غلبہ اور قلتِ عقل کی بنا پر اس پرخوش ہوں گے، لوگوں میں سب سے احمق شخص وہی ہوتا ہے جواپنے اس اعتقاد پر زیادہ قوی ہو اور ان میں سب سے عقل مندوہ ہے جو اپنی ذات ، اپنے آپ اور اپنے گمان کو زیادہ ناقص سمجھے اور باعمل علماء کرام رحمہم اللہ تعالیٰ اور ہدایت یافتہ ائمہ کرام رحمہم اللہ تعالیٰ سے سوال کرنے میں زیادہ حریص ہو۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

error: Content is protected !!